اپریل 23, 2021

ڈیلی سویل۔۔ زمیں زاد کی خبر

Daily Swail-Native News Narrative

دوست ہوں دشمن نہ بنائیں، جہانگیرترین کا عمران خان کو انتباہ

آج لاہور میں بینکنگ کورٹ پیشی پر 3اراکین قومی اسمبلی ، 9اراکین صوبائی اسمبلی اور تین مشیر جہانگیر خان ترین کے ہمراہ اظہار یکجہتی کے لیے آئے

لاہور: پاکستان تحریک انصاف کے رہنما جہانگیرخان ترین نے وزیراعظم عمران خان کو خبردار کیا ہے کہ وہ تحریک انصاف کے دوست ہیں دشمن نہ بنائیں۔ لاہور میں عدالت پیشی کے موقع پر میڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا ہے کہ مجھ  پر بے بنیاد الزامات عائد کیے جا رہے ہیں۔

جہانگیر ترین اور علی ترین ایف آئی اے بینکنگ کورٹ لاہور میں پیش ہوئے تھے۔ تحریک انصاف کے رہنما راجہ ریاض اور دیگر پی ٹی آئی رہنما بھی جہانگیرترین کے ہمراہ تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمارے خلاف بے بنیاد مقدمات بنائے گئے ہیں۔ میرے خلاف 3مقدمات ہیں۔ پاکستان میں80 شوگر ملز ہیں، لیکن نشانے پر صرف میں ہوں۔

انہوں نے کہا کہ ہم تحریک انصاف سے انصاف مانگ رہے ہیں۔ میرے اور میرے بیٹے کے اکاؤنٹ منجمد کردیے گئے ہیں۔

جہانگیرترین نے کہا کہ اکاؤنٹ کیوں منجمد کیے، اس سے کیا فائدہ ، یہ سب کون کررہا ہے؟ ظلم بڑھتا جارہا ہے، میری وفاداری کا امتحان لیا جارہا ہے۔

بینکنگ کورٹ کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ’میں پوچھتا ہوں آخر یہ انتقامی کارروائی کیوں ہورہی ہے، وجہ کیا ہے؟ ملک کی 80 شوگر ملز میں سے انھیں صرف جہانگیر ترین نظر آیا۔ جو بھی یہ سب کررہا ہے وقت آگیا ہے انہیں بے نقاب کیا جائے۔

ایک سوال کے جواب میں جہانگیرترین نے کہا پی ٹی آئی سے راہیں جدا نہیں ہوئیں۔

رہنما پی ٹی آئی راجہ ریاض نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا وزیراعظم عمران خان کو ایکشن لینا چاہیے۔ نقصان تحریک انصاف کو پہنچ رہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم اپنے بہترین اور جان نثار دوست کے خلاف زیادتی بند کرائیں۔

راجہ ریاض کا کہنا تھا کہ عمران خان کے اعتماد کا ووٹ لینے میں اہم کردار جہانگیر ترین کا ہے۔ کچھ لوگ جہانگیر ترین کے خلاف سازش کر رہے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ سینیٹ الیکشن کے بعد عمران خان کے اعتماد کا ووٹ لینے میں اہم کردار جہانگیر ترین کا ہے۔ جہانگیر ترین مثبت کردار ادا نہ کرتے تو عمران خان قومی اسمبلی سے اعتماد کا ووٹ نہ لےسکتے۔

واضح رہے کہ آج لاہور میں بینکنگ کورٹ پیشی پر 3اراکین قومی اسمبلی ، 9اراکین صوبائی اسمبلی اور تین مشیر جہانگیر خان ترین کے ہمراہ اظہار یکجہتی کے لیے آئے

اراکین قومی و صوبائی اسمبلی کا تعلق ، فیصل آباد، جھنگ ، ملتان، مظفر گڑھ،لیہ اور سرگودھا اور خوشاب سے ہے۔

ایم این اے غلام بی بی بھروانہ،غلام احمد لالی، راجہ ریاض کے ساتھ ساتھ صوبائی وزیر نعمان لنگڑیال بھی موجود تھے۔

اراکین صوبائی اسمبلی میں زوار وڑائچ،نذیر بلوچ،اسلم بھروانہ،طاہر رندھاوا،چوہدری افتخار گوندل، غلام رسول سنگھا،سلمان نعیم اور خرم لغاری ، مشیر عبدالحئی دستی
امیر محمد خان اورسابق مشیر خرم لغاری بھی موجود تھے۔

یہ بھی پڑھیے:

جناب! عوام کو ہلکا نہ لیں۔۔۔عاصمہ شیرازی

’لگے رہو مُنا بھائی‘۔۔۔عاصمہ شیرازی

یہ دھرنا بھی کیا دھرنا تھا؟۔۔۔عاصمہ شیرازی

نئے میثاق کا ایک اور صفحہ۔۔۔عاصمہ شیرازی

%d bloggers like this: