اگست 3, 2021

ڈیلی سویل۔۔ زمیں زاد کی خبر

Daily Swail-Native News Narrative

“ درویش شاعر۔۔۔۔۔جانباز جتوئ سئیں “||تعارف احسان اعوان

رام لعل کا مکمل نام رام لعل چھابڑا ہے۔وہ3 مارچ1923ء کو وتہ خیل ( میانوالی ) میں لچھمن داس چھابڑا کے ہاں پیدا ہوۓ ۔ راجہ من موہن راۓ ہائ سکول میانوالی سے میٹرک کیا۔

احسان اعوان

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

“ سرائیکی دھرتی کا لعل۔۔۔ رام لعل”
——————————————-
رام لعل کا مکمل نام رام لعل چھابڑا ہے۔وہ3 مارچ1923ء کو وتہ خیل ( میانوالی ) میں لچھمن داس چھابڑا کے ہاں پیدا ہوۓ ۔ راجہ من موہن راۓ ہائ سکول میانوالی سے میٹرک کیا۔ 1938ء سے1941ءتک نارتھ ویسٹرن ریلوے مغلپورہ ورکشاپ لاہور میں مشین مین رہے۔1944ء میں ریلوے میں بطور پارسل کلرک بھرتی ہوۓ اور 13 مارچ1981ء میں انڈین ریلوے سے ریٹائرمنٹ لی۔
1947ء میں تقسیم برصغیر کے بعد میانوالی سے نقل مکانی کرکے لکھنؤ کو اپنا مسکن بنایا۔
15 اکتوبر1945ء میں مسز شکنتلا چھابڑا سے شادی ہوئ ۔ ان کی اولاد یں مسز شیل موہنی، ویرو نود چھابڑا، اورمسزکرنن سبھر وال ہیں ۔
رام لعل نے عملی زندگی میں آنےکے بعد کئ شہروں کی خاک چھانی، وہ کچھ عرصہ ملتان بھی رہے۔ لکھنے کا آغاز یہیں سے کیا ۔
رام لعل کسمپرسی کے عالم میں 16 . اکتوبر1996ء کو لکھنؤ میں سورگ باش ہوۓ۔
انہوں نے24 سال پاکستان اور 49 سال ہندوستان میں گذارے۔
لکھنؤ میں 1972 ء سے 1977ء تک میانوالی کے نام پرایک سرائیکی میلہ منعقد کرایا۔وہ میانوالی کو اپنی جند، جان اور ایمان کہتے تھے ۔
رام لعل 32 سال بعد جب اپنے شہر آۓ تو میانوالی کے اہل قلم نے ان کے اعزاز میں ایک شاندار تقریب کا اہتمام کیا۔
رام لعل کو جب پروفیسرمنور علی ملک اور پروفیسر محمد سلیم احسن ان کا گھر دکھانے کے لۓ لے گۓ تو وہ دیر تک دہلیزوں کو بوسے دیتے رہے، دروازوں پر پیار سےہاتھ پھیرتےرہے،آنسو بہاتے رہے۔صحن کےایک کونے سے تھوڑی سی مٹی پلاسٹک کی تھیلی میں ڈالی اور گھر میں موجود بیری کی ایک ننھی سی ٹہنی اپنے ہینڈ بیگ میں رکھی۔ اور اپنے ساتھ انڈیا لے گۓ۔
رام لعل افسانہ نگاری اور ناول نگاری میں ایک منفرد مقام رکھتے ہیں۔
رام لعل کی قابل ذکرتصانیف:
———————————
• آئینے۔ ۔۔۔۔۔( افسانے)
• انقلاب آنے تک۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• نئ دھرتی پرانے لوک گیت
• وہ مسکراۓ گی ۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• گلی، گلی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• آواز تو پہچانو۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• چراغوں کا سفر۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• کل کی باتیں۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• پکھیرو۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• انتظارکےقیدی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• اُکھڑےہوۓ لوگ۔۔۔۔۔۔۔۔
• گزرتے لمحوں کی چاپ۔۔
• معصوم آنکھوں کا بھرم۔
• سدا بہار چاندنی۔۔۔۔۔۔۔
• ڈوبتا ابھرتا آدمی۔۔۔۔۔۔۔
• ایک اور دن کو پرنام ۔۔۔۔
• آتش خور۔۔۔۔۔۔۔( ڈرامے)
• دریچوں میں رکھے چراغ
• رام لعل کے منتخب افسانے
• رام لعل کے شب وروز۔۔۔
• چاچی کاڈھابہ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• جو عورت ننگی ہے۔۔۔۔۔۔
• رام لعل کی پیاری پیاری کہانیاں
• مُٹھی بھر دھوپ ( ناول )
• کہر اور مسکراہٹ۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• نیل دھارا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• آگے پیچھے۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• سورج جیسی رات۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• خواب خواب سفر ( سفرنامے)
• زرد پتوں کی بہار۔(سفرنامہ پاکستان)
• ماسکو یاترا۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
•اردو افسانے کی نئ تخلیقی فضا ۔
• کوچۂ قاتل (1947 میں میانوالی سے ہجرت کی آپ بیتی)
• قند مکرر۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• رام لعل کےنام خطوط۔۔۔۔۔
• حرفِ شیریں۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
• خواجہ احمد عباس کے منتخب افسانے
• رام لعل کی افسانہ نگاری
• رام لعل ۔۔فن، شخصیت۔
رام لعل کے 36 ریڈیو پلے آل انڈیا ریڈیو لکھنؤ،دہلی، جموں،سری نگر، جالندھر،ناروے، بی بی سی سے نشرہوچکے ہیں۔ان کے بہت سے افسانوں کے مراٹھی،آسامی، گجراتی، ملیالم،تامل، تیلگو، اوڑیا،پنجابی،سرائیکی،انگریزی اور روسی زبانوں میں تراجم ہو چکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیے:

احسان اعوان  دیاں لکھتاں پڑھو

%d bloggers like this: